بلوچستان نیشنل پارٹی گوادر کے ضلعی آرگناھزر اکرم حیات جیونی پانی بحران کے حوالے سے پریس کانفرنس کررہے ہیں

بلوچستان نیشنل پارٹی گوادر کے ضلعی آرگناھزر اکرم حیات جیونی پانی بحران کے حوالے سے پریس کانفرنس کررہے ہیں

 گوادر (بیورو رپورٹ) جیونی ، پانی کا بحران شدت اختیار کر گیا ، پانی کی مصنوعی بحران سے شہری بوند بوند کو ترس گئے ، محکمہ پبلک ہیلتھ ضلعی انتظامیہ ،علاقے کے منتخب ایم پی اے ،ایم این اے ، چیف سکریٹری ،اور وزیر اعلیٰ بلوچستان کو الٹی میٹم ، اگر ایک ہفتے کے اندر جیونی میں پانی کی مصنوعی بحران پر قابو نہیں پایا گیا تو بی این پی اہلیان جیونی کے ساتھ مل کر شدید احتجاج کرے گی ۔

 ان خیالات کا اظہار بی این پی (مینگل) گوادر کے ضلعی آرگنائزر اکرم حیات ، کہدہ علی ، نور گھنہ، ماجد سہرابی ، ناصر موسیٰ و دیگر نے بی این پی کی ضلعی رابطہ آفس میں منعقدہ پرہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔انھوں نے کہا کہ جیونی کے عوام گزشتہ کئی عرصے سے پانی کی مصنوعی بحران کا شکار ہیں ، محکمہ پبلک ہیلتھ کی ناقص کارکردگی سے ہزاروں نفوس پر مشتمل جیونی اور قرب و جوار کے آبادی کو ہر دو ماہ بعد صرف چند گھنٹوں کے لیے پانی دی جاتی ہے ۔

جو اتنی بڑی آبادی کی ضرورت کو کسی صورت پورا نہیں کرتا ۔انھوں نے کہا کہ اہلیان جیونی کی خواتین اور بچے حصول پانی کی تلاش میں میلوں پیدل چلنے پر مجبور ہیں ۔ انھوں نے کہا کہ 1987 میں بھی جیونی میں پانی کی مصنوعی بحران پیدا ہوا تھا جس پر جب لوگوں نے احتجاج کیا جس کے نتیجے میں تین افراد کو گولیاں چلاکر انھیں شہید کیا گیا جس میں ایک خاتون ،ایک بچی اور نوجوان شامل تھا 

آج ایک مرتبہ پھر جیونی میں 1987 کا واقع دہرانے کی کوشش کی جارہی ہے ۔ انھوں نے کہا کہ محکمہ پبلک ہیلتھ جیونی کا کوئی اہلکار ڈیوٹی پر موجود نہیں ، پورے جیونی میں صرف ایک ایک وال مین محکمے کے سسٹم کو چلا رہا ہے ۔ انھوں نے کہا کہ جیونی میں پانی کی مصنوعی بحران کو حل کرنے کی خاطر 94 کروڑ روپے کی لاگت سے نئے پائپ لائنوں کی بچھائی کے لیے ٹینڈر طلب کئے گئے تھے مگر مٹیریل کے ریٹس بڑھنے کے سبب کسی بھی ٹھیکہ دار نہیں یہ ٹینڈر قبول نہیں کئیے اب علاقے کے ایم پی اے کی کوششوں سے نئے پی ایس ڈی میں ایک ارب 64 کروڑ روپے کی لاگت سے منصوبہ ڈیزائن کیا گیا ہے ۔

انھوں نے کہا کہ جیونی میں بجلی کا نظام ضلعے کے دیگر علاقوں سے بہتر ہے لیکن محکمہ پبلک ہیلتھ کا کہنا ہےکہ جنریٹر چلانے کے لیے فیول کا مسئلہ ہے جو کہ قطعی طور پر غلط ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ پی ایچ ای جیونی کی اہلکار کرپشن میں ملوث ہیں ۔ انھیں عوام کی پریشانیوں کا کوئی ادراک نہیں ۔

جیونی میں کربلا کا منظر ہے ۔ لوگ پانی خریدنے پر مجبور ہیں ایک ٹینکر پانی پندرہ ہزار جبکہ فی چیمبر چار ہزار روپے میں فروخت ہورہا ہے جو غریبوں کی دست رس سے بار ہے ۔ جبکہ اس وقت حالیہ بارشوں سے آنکاڑہ ، سوڈ ڈیم سمیت تمام چھوٹے بڑے ڈیمز پانی سے لبریز ہیں لیکن اس کے باوجود جیونی کے عوام پانی کی بوند بوند کو ترس رہی ہیں انھوں نے کہا کہ ہم نے اہلیان جیونی کے ساتھ مل کر جیون میں پانی کی مصنوعی بحران پر جیونی میں شٹر ڈاؤن ہڑتال کیا تھا ۔

انھوں ضلعی انتظامیہ ، محکمہ پبلک ہیلتھ ، ایم پی اے ، ایم این اے ، چیف سکریٹری اور وزیر اعلیٰ بلوچستان کو الٹی میٹم دیتے ہوئے مطالبہ کیا کہ اگر جیونی میں ایک ہفتے کے اندر ہنگامی بنیادوں پر پانی کی سپلائی شروع نہیں کی گئی تو بی این پی اہلیان جیونی کے ساتھ مل کر شدید احتجاج کرے گی ۔ اس موقع پر بی این پی گوادر اور جیونی کے کارکنان کی بڑی تعداد موجود تھی ۔

0/Post a Comment/Comments

براہ کرم کمنٹ باکس میں کوئی سپیم لنک نہ ڈالیں۔

Facebook Comments APPID